تازہ ترین
آئی ایم ایف نے پاکستانی معیشت کیلئے بڑے خطرات کی نشاندہی کردیخیرپور میں لاکھوں روپے راشن کے 4 ٹرک لوٹ لیے گئےصوابی بڑی تباہی سے بچ گیا، 4 دہشتگرد گرفتارعمران خان کا جیل بھرو تحریک کا اعلاندوران حراست جگائے رکھا گیا، شیخ رشیدآئی ایم ایف ڈیل: سگریٹس، کولڈڈرنکس اور جہازوں کے ٹکٹس مہنگے ہونے کا امکانفواد چوہدری گرفتاری کے وقت نشے کی حالت میں تھے، میڈیکل رپورٹایم کیو ایم نےضمنی الیکشن کیلئے27 نام شارٹ لسٹ کرلیےپاکستان میں بندش پر وکی پیڈیا کا بیان سامنے آگیاکراچی میں فرسٹ انٹرنیشنل ٹیچرز ایجوکیشن کانفرس کا انعقادشیخ رشید نے اپنی کراچی منتقلی روکنے کیلئے ہائیکورٹ سے رجوع کرلیاپنجاب اور خیبرپختونخوا میں تمام بلدیاتی نمائندے معطلشاہ محمود کا آل پارٹیز کانفرنس میں شرکت سے متعلق حکومت کو مشورہنواب شاہ: بیٹوں نے باپ پر پیٹرول چھڑک کر آگ لگا دیگھی، دالیں، انڈے، لہسن، چاول، چینی، مرغی اور پیٹرول سمیت 32 اشیا مہنگی ہو گئیںنیپالی بزنس کونسل کی جانب سے دبئی میں نیٹ ورکنگ عشائیہ کا اہتمامدانش پرائمیر کرکٹ لیگ سیزن ون کا سہرا سیگماء ایسوسیٹ نے اپنے سر سجا لیا۔پشاور دھماکہ: حملہ آور کا جوتا اور ہیلمٹ بھی مل گیاجامعہ کراچی: انجمن اساتذہ کا تدریسی امور کے بایئکاٹ کا اعلانفیس بک کو روزانہ کتنے افراد استعمال کرتے ہیں؟

ہم نے سیاسی چال چلی تو مزید لوگ ڈی نوٹیفائی کردیے گئے، شاہ محمود قریشی

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ ہم نے سیاسی چال چلی تو مزید لوگ ڈی نوٹیفائی کردیے گئے۔

ملتان میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ لگتا یہ ہےکہ تحریک انصاف کی مقبولیت کے خوف سے تمام حدیں پار کرلی گئی ہیں۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ محسن نقوی پر ہمیں سنجیدہ تحفظات ہیں، الیکشن کمیشن کو نگراں وزیرِ اعلیٰ پنجاب کے خلاف احتجاج ریکارڈ کروایا گیا۔

انہوں نے کہا کہ ، کے پی کے میں ہم نے اپوزیشن کے نگراں وزیرِ اعلیٰ کا نام قبول کیا، ان کا ایک نام اور شہرت ہے، پنجاب میں ہم نے کوشش کی کہ ایسا نام دیں جو پی ڈی ایم کو قبول ہو، پنجاب میں راستہ نہیں نکالا گیا، شفاف انتخابات پی ڈی ایم کو وارا نہیں کھاتے۔

فواد چوہدری کی گرفتاری کے حوالے سے بات کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہاکہ ان کی گرفتاری کی وجہ ایک ایف آئی آر بتائی گئی، حقیقت یہ ہے تحریک انصاف کو دباؤ میں لانا ہے،رول آف لا پر یقین رکھنے والوں کو آج حیرانی ہوئی۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ لگتا ہے کہ یہ لوگ کسی ایجنڈے کے تحت آگے بڑھ رہے ہیں، سوال یہ ہے کہ ان حرکتوں سے ملک کو کیا حاصل ہو گا؟

ان کا مزید کہنا ہے کہ اسمبلیاں آئین کے تقاضوں کے مطابق تحلیل کی گئیں، ہم نے چاہا کہ آئینی طریقے سے سرکاری قائد حذب اختلاف کو ہٹائیں، انہیں ڈر ہے کہ عمران خان پھر اقتدار میں نہ آجائے اس لیے پورا ملک داؤ پر لگانا چاہتے ہیں، پاکستان بہت مشکل حالات سے دوچار ہو رہا ہے۔

پی ٹی آئی کے وائس چیئرمین نے یہ بھی کہا کہ صنعت کار کہہ رہے ہیں کہ ہم پاکستان سے باہر جا کر سرمایہ کاری کریں گے، ملک میں بے یقینی کی صورتِ حال ہے، یہاں ڈالرائزیشن ہو رہی ہے۔

About قومی مقاصد نیوز

تبصرہ کریں

آپ کی ایمیل یا ویبشایع نہیں کی جائے گی. لازمی پر کریں *

*

Translate »