تازہ ترین
آئی ایم ایف نے پاکستانی معیشت کیلئے بڑے خطرات کی نشاندہی کردیخیرپور میں لاکھوں روپے راشن کے 4 ٹرک لوٹ لیے گئےصوابی بڑی تباہی سے بچ گیا، 4 دہشتگرد گرفتارعمران خان کا جیل بھرو تحریک کا اعلاندوران حراست جگائے رکھا گیا، شیخ رشیدآئی ایم ایف ڈیل: سگریٹس، کولڈڈرنکس اور جہازوں کے ٹکٹس مہنگے ہونے کا امکانفواد چوہدری گرفتاری کے وقت نشے کی حالت میں تھے، میڈیکل رپورٹایم کیو ایم نےضمنی الیکشن کیلئے27 نام شارٹ لسٹ کرلیےپاکستان میں بندش پر وکی پیڈیا کا بیان سامنے آگیاکراچی میں فرسٹ انٹرنیشنل ٹیچرز ایجوکیشن کانفرس کا انعقادشیخ رشید نے اپنی کراچی منتقلی روکنے کیلئے ہائیکورٹ سے رجوع کرلیاپنجاب اور خیبرپختونخوا میں تمام بلدیاتی نمائندے معطلشاہ محمود کا آل پارٹیز کانفرنس میں شرکت سے متعلق حکومت کو مشورہنواب شاہ: بیٹوں نے باپ پر پیٹرول چھڑک کر آگ لگا دیگھی، دالیں، انڈے، لہسن، چاول، چینی، مرغی اور پیٹرول سمیت 32 اشیا مہنگی ہو گئیںنیپالی بزنس کونسل کی جانب سے دبئی میں نیٹ ورکنگ عشائیہ کا اہتمامدانش پرائمیر کرکٹ لیگ سیزن ون کا سہرا سیگماء ایسوسیٹ نے اپنے سر سجا لیا۔پشاور دھماکہ: حملہ آور کا جوتا اور ہیلمٹ بھی مل گیاجامعہ کراچی: انجمن اساتذہ کا تدریسی امور کے بایئکاٹ کا اعلانفیس بک کو روزانہ کتنے افراد استعمال کرتے ہیں؟

موسمیاتی تبدیلی سے متعلق اہم معاہدے پوری دنیا کی جیت ہے، بلاول بھٹو

وزیر خارجہ بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ موسمیاتی تبدیلی سے متعلق اہم معاہدے کا ہونا کسی ایک ملک نہیں بلکہ پوری دنیا کی جیت ہے، ایک دوسرے کی طرف انگلی اٹھانے کے بجائے مشترکہ جدوجہد پر توجہ مرکوز کرنی ہوگی، مجھے اپنے لوگوں کو دوبارہ ان کے قدموں پر کھڑا کرنا ہے۔

غیرملکی نشریاتی ادارے کو انٹرویو دیتے ہوئے بلاول نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلی سے متعلق معاہدہ ان کی جیت ہے جو موسمیاتی تبدیلیوں کی تباہی سے متاثر ہوئے ہیں، مالی تعاون کے حوالے سے دیکھنا ہےکہ عالمی مالیاتی نظام کیا طریقہ کار اپناتا ہے، مالی تعاون کا معاملہ کاپ کے آئندہ اجلاس تک مکمل ہونے کا امکان ہے۔

کاپ کے آئندہ اجلاس کی میزبانی متحدہ عرب امارات کرے گا، جی 77 پلس چین میں بہت سارے ممالک ماضی کے وعدوں کی عدم تکمیل پر پریشان ہیں، معاہدے میں لکھی تحریر اہم ہے جو ان ممالک کو اپنے وعدوں کی پاسداری کا پابند بناتی ہے، موسمیاتی تبدیلیوں کی تباہی سے ترقی پزیر ممالک ہی نہیں بلکہ ترقی یافتہ بھی متاثر ہوں گے۔

بلاول نے کہا کہ جی 77 پلس چائناکے سربراہ کے طور پر چاہتے ہیں کہ معاہدے کے نکات پر عمل درآمد ہو، ہم نے ڈیمیج اینڈ لاس فنڈ قائم کیا اور مالی مدد کی فراہمی کے لیے انتظامات کیے ہیں، ہم نے مقررہ وقت میں اس سے منسلک اہداف کو پورا کرنے کے لیے کام کرنا ہے، پاکستان جی 77 اور یو اے ای کے اپنے شراکت داروں کے ساتھ مل کر کام کرنے کا منتظر ہے۔

انہوں نے مزید بات کرتے ہوئے کہا کہ ایک دوسرے کی طرف انگلی اٹھانے کے بجائے مشترکہ جدوجہد پر توجہ مرکوز کرنی ہوگی، پاکستان میں رواں سیلاب سے پہلی بار تباہی نہیں ہوئی، پہلے بھی گرمی کی لہر اور سیلاب آچکے ہیں، آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک میں کلائمیٹ بینک بھی ہونا چاہیے جہاں جاسکیں، کلائمیٹ بینک سے مناسب ریٹ پر قرض ملنے چاہئیں تاکہ اپنے لوگوں کی بحالی ممکن ہو، زہرآلود ایندھن کے استعمال کو ختم کرنے کے لیے عملی اتفاق رائے کی ضرورت ہے۔

About قومی مقاصد نیوز

تبصرہ کریں

آپ کی ایمیل یا ویبشایع نہیں کی جائے گی. لازمی پر کریں *

*

Translate »