تازہ ترین
این اے 133 ضمنی انتخاب، پی پی کو 2018 کے مقابلے میں 26ہزار728 ووٹ زیادہ ملےبھارتی ریاست ناگالینڈ میں سکیورٹی فورسز نے فائرنگ کر کے 13مزدور مار ڈالےآئی ایم ایف کی نئی شرائط ملکی اداروں کو گروے رکھنے کے مترادف ہے، محمد حسین محنتیوہاڑی واقعہ، عثمان بزدار کی قائداعظم کے مجسمے پر فوری طورپر عینک لگانے کی ہدایتمنی لانڈرنگ کیس: جیکولین فرنینڈس کو بھارت سے باہر جانے سے روک دیا گیاگوادر کوقومی اور بین الاقوامی مافیاز کے رحم وکرم پر نہیں چھوڑیں گے، سراج الحقوزیراعظم کا پریانتھا کمارا کو بچانےکی کوشش کرنیوالے شخص کیلئے تمغہ شجاعت کا اعلانپریمئیر لیگ کرکٹ ٹورنامنٹ میں ملک بھر سے 12 ٹیموں کے 200 پلئرز نے حصہ لیاتیز رفتارگاڑی نے 4 بچوں کوکچل دیا، ایک بچہ جاں بحقاسسٹنٹ کمشنر کو فائرنگ کرکے قتل کردیا گیادنیا کی معمر ترین ٹیسٹ کرکٹر ایلین ایش110سال کی عمر میں انتقال کر گئیں’وزیراعظم 10 دسمبر کو کراچی کے پہلے جدید ترین ٹرانسپورٹ سسٹم کا افتتاح کریں گے‘ٹائر پھٹنے پر مسافروں کا طیارے کو دھکا لگانے کا انوکھا واقعہپاکستان سمیت دنیا بھر میں آج سندھی ثقافتی دن منایا جارہاہےلڑکی سے زیادتی کے الزام میں گرفتار سینئر سول جج ضمانت پر رہاسیالکوٹ واقعہ: گرفتار افراد میں سے 13 اہم ملزمان کی شناخت، تصاویر جاریملک میں قرآن و سنت جمہوریت و آئین کی بالادستی کیلئے اچھی قیادت کو آگے لانا ہوگا۔ لیاقت بلوچلاقانونیت اور کرپشن نے ملک کو کھوکھلا کر دیا، سراج الحقایک شخص مشتعل ہجوم سے پریانتھا کمارا کو بچانےکی تن تنہا کوشش کرتا رہاملک میں سونا 600 روپےفی تولہ سستا ہوگیا

ملکی تاریخ میں پہلی بار تمام مافیاگروپس نے ایک ساتھ عوام پرہلہ بول دیا ہے: میاں زاہد حسین

فائل فوٹو

پاکستان بزنس مین اینڈ انٹلیکچولز فور م وآل کراچی انڈسٹریل الائنس کے صدر ، ایف پی سی سی آئی میں بزنس مین پینل کے سینئر وائس چیئرمین اور سابق صوبائی وزیر میاں زاہد حسین نے کہا ہے ملکی تاریخ میں پہلی بار تمام مافیاگروپس نے ایک ساتھ عوام پرہلہ بول دیا ہے ۔

کرونا وائرس، لا ک ڈاءون اور دگرگوں معاشی حالات سے پریشان عوام پر مسلسل مہنگا ئی کا شب خون مارا جا رہا ہے اور ظالموں کا ہاتھ روکنے کےلئے کوئی موثر نظام موجود نہیں ۔ ملک میں کنزیومر پروٹیکشن کا لفظ صرف اخباری بیانات تک محدود ہو کر رہ گیاہے ۔ میاں زاہد حسین نے بزنس کمیونٹی سے گفتگو میں کہا کہ کاروباری دنیا میں جنگل کا قانون راءج ہے اور ضمیر فروش جیسے چاہےں عوام کو لوٹ رہے ہےں جبکہ جائز کاروبار کرنے والی کمپنیوں اور کاروباری اداروں اور عوام کے تحفظ کے متعلق قوانین کی کمی ہے اور جو قوانین موجود ہیں ان پر عمل درآمد کروانے والوں کے پاس پیدا واری لا گت جانچنے کا کوئی موثر نظام نہیں ہے ۔ ایک صوبے کے تمام پٹرول پمپوں پر لاکھوں روپے کے جرمانے زیا دتی ہے ۔ انھوں نے کہا کہ دنیا کے بہت سے ممالک میں جتنی توجہ ملکی سا لمیت پر دی جاتی ہے اتنی ہی عوام کے مفادات کے تحفظ کو دی جاتی ہے اور انکے استحصال کی کوشش کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیا جاتا ہے مگر پاکستان میں اشیاء اور خدمات کے من مانے دام وصول کئے جاتے ہیں اور مار کیٹوں میں جعلی ،غیر معیاری اور اسمگل شدہ اشیاء کی بھر مار ہے ۔ انھوں نے کہا کہ بھارت میں ہر قسم کی مینوفیکچرنگ کی لاگت کا آڈٹ لازمی ہے تاکہ کوئی ناجائز منافع نہ کما سکے مگر پاکستان میں ایسا کچھ نہیں ہے جومنافع خوروں کی حوصلہ افزائی کا سبب ہے ۔ بھارت میں تین خدمات فراہم کرنے والے اور زیادہ منافع کمانے والے ادارے صحت، تعلیم اور رئیل اسٹیٹ کا کاسٹ آڈٹ بھی لازمی ہے اس طرح کا نظام پاکستان میں بھی نافذ کیا جانا چا ہئے تاکہ پاکستانی عوام کو بھی سکھ کا سانس لینا نصیب ہو ۔ ہمارے قانون میں کاسٹ آڈٹ کی گنجائش موجود ہے مگر اس پر عمل درآمد کو ریگولیٹرکی مرضی پر چھوڑ دیا گیا ہے جس نے ضمیر فروشوں کےلئے لوٹ مار کا دروازہ کھول دیا ہے ۔ سرکاری افسران امیر اور عوام غریب سے غریب تر ہوتے جا رہے ہیں ، معیشت چلنے کا نام نہیں لے رہی ہے جبکہ کشکول کا سائز بڑھتا ہی جا رہا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ معیشت کو اقتصادی قوانین کی روشی میں چلایا جائے نہ کہ جنگل کے قانون کے طرزپر ۔

About قومی مقاصد نیوز

تبصرہ کریں

آپ کی ایمیل یا ویبشایع نہیں کی جائے گی. لازمی پر کریں *

*

Translate »