تازہ ترین
نائیجر میں پاکستان کے سفیراحمد علی سروہی کی وزیر صنعت جیبو سلاماتو گوروزا ماگاگی سے ملاقاتکیوی وزیر اعظم نے کورونا کے باعث اپنی شادی ملتوی کر دیرضوان آئی سی سی ٹی ٹوئنٹی کرکٹر آف دی ایئر قرارمسلم عقیدے کے سبب وزارتی ذمہ داریوں سے فارغ کیا گیا: برطانوی رکن پارلیمنٹمارٹرگولہ پھٹنے سے 4 افراد جاں بحقاغوا برائے تاوان کی وارداتوں میں ملوث جعلی کسٹم انسپکٹرگرفتارنوازشریف کو باہر بھیجنے کا فیصلہ 100 فیصد عمران خان کا تھا: اسد عمر29واں آل پاکستان شوٹنگ بال ٹورنامنٹ کا آغاز:70ٹیموں مد مقابل ہیںایلون مسک دماغی چپ کی انسانی جانچ کے قریبسندھ پولیس کے پاس واٹس ایپ کال ٹریس کرنے کی ٹیکنالوجی موجود نہ ہونے کا انکشافپپدریائے سندھ کی 3 ڈولفنز کو سیٹلائٹ ٹیگس لگاکر دریا میں چھوڑ دیا گیاصدارتی نظام کا شوشہ حکومتی ناکامی اور مہنگائی سمیت عوام کے سلگتے مسائل سے توجہ ہٹانے کی کوشش ہے، محمد حسین محنتیایک ہفتے میں 24 اشیا کی قیمتوں میں اضافہ، مہنگائی کی شرح 19.36 فیصد پرآگئیلمس: ملازمین کے کاموں میں سکندر جونیجو، سرفراز میمن ودیگر رکاوٹ اور بلیک میلنگ کر رہے ہیں: قلندر بخش بوزدارکراچی کی ضروریات کونظراندازکرنا کمزورمعیشت سے کھیلنے کے مترادف ہے، میاں زاہد حسینشرمیلا کی والدہ سے کیا ان کے بینک اکاؤنٹس کا پوچھتی؟ نادیہ خانڈکیتی کے کیس میں شوہر کے سامنے خاتون سے زیادتی کا بھی انکشافلاہور: انار کلی بازار دھماکے کیلئے کتنے دہشتگرد آئے؟ تفصیلات سامنے آ گئیںگرل فرینڈ کی ماں کو گردہ عطیہ کرنے والے شخص کو دھوکا، لڑکی نے کسی اور سے شادی کرلیبھیک مانگنے والی لڑکی پر دکاندار نےگرم گھی پھینک دیا

وزیراعظم نے چینی پر سبسڈی نہیں بلکہ چینی برآمد کرنے کی اجازت دی، شہزاد اکبر

وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے  احتساب شہزاد اکبر کا کہنا ہے کہ شاہد خاقان عباسی مسلسل جھوٹ بول رہے ہیں، وزیراعظم عمران خان نے چینی پر سبسڈی نہیں بلکہ چینی برآمد کرنے کی اجازت دی تھی۔

سابق وزیراعظم و مسلم لیگ (ن) کے سینیئر نائب صدر شاہد خاقان عباسی کی پریس کانفرنس کا جواب دیتے ہوئے شہزاد اکبر کا کہنا تھا کہ جس وقت وزیراعظم نے  چینی برآمد کی اجازت دی اس  وقت ملک میں چینی کا وافر ذخیرہ موجود تھا۔

شہزاد اکبر کا کہنا تھا کہ شاہد خاقان عباسی نے 2018-2017ء میں سلیمان شہباز کے کہنے پر 24 گھنٹوں کے اندر 20 ارب روپے کی سبسڈی دی۔

وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر کا کہنا تھا کہ شوگر کمیشن کی رپورٹ شاہد خاقان کے لیے چارج شیٹ ہے، انہیں اس کا جواب دینا ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کہ ایسا تاثر دیا جارہا ہے کہ اپوزیشن کا احتساب کیا جارہا ہے،جو بھی پکڑا جاتا ہے کہتا ہے انتقامی کارروائی ہورہی ہے، ماضی میں ایسا کون سا کمیشن بنا ہے جس میں وزراء پیش ہوئے ہوں؟

‘چینی ڈاکے کے ذمہ دار عمران خان، اسد عمر اور وزیر اعلیٰ پنجاب ہیں’

خیال رہے کہ آج راولپنڈی میں پریس کانفرنس کے لیے آنے سے قبل شاہد خاقان عباسی دکان سے چینی خرید کر لائے اور کہا کہ چینی کی موجودہ قیمت 90 روپے کلو ہو چکی ہے۔

انہوں نے کہا کہ چینی ڈاکے کے ذمہ دار عمران خان، اسد عمر اور وزیر اعلیٰ پنجاب ہیں، چینی برآمد سے پہلے اس کی قیمت 55 روپے 47 پیسے تھی اور اب چینی کی قیمت 60 فیصد بڑھ گئی ہے، اس کا جواب عمران خان دیں۔

شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ کمیشن اس لیے بنا تھا کہ چینی کی قیمت کیوں بڑھی تعین کیا جائے لیکن کمیشن کی رپورٹ میں برآمد کی اجازت دینے والے اصل ذمہ داران، وزیراعظم اور اسد عمر کا نام شامل نہیں، چینی برآمد کرنے کا فیصلہ وفاقی کابینہ کا تھا، وفاقی کا بینہ کی سربراہی وزیرا عظم کرتے ہیں تو ذمہ دارعمران خان ہیں۔

لیگی رہنما کا مزیدکہنا تھا کہ چینی کی ایکسپورٹ پر میں نے بھی سبسڈی دی تھی، اگر پرچہ درج کرنا ہے تو مجھ پر اور عمران خان دونوں پر کیا جائے گا، 200 ارب کا ڈاکہ ڈال کر حکومت کے لوگ معصوم ہیں؟ عثمان بزدار سب سے زیادہ معصوم ہیں۔

About قومی مقاصد نیوز

تبصرہ کریں

آپ کی ایمیل یا ویبشایع نہیں کی جائے گی. لازمی پر کریں *

*

Translate »